مظفر آباد میں شدید بارش

مظفر آباد: (رائل نیوز) مظفر آباد میں بارش سے تحریک انصاف کی انتخابی مہم متاثر، پانی جمع ہونے سے وزیراعظم عمران خان کا جلسہ ملتوی کر دیا گیا۔
تحریک انصاف کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کے دوبارہ جلسہ کی تاریخ کا اعلان جلد کیا جائے گا۔
گزشتہ روز بھمبر اور میرپور میں جلسوں سے خطاب میں وزیراعظم عمران خان نے کہا تھا کہ راشٹریہ سوائم سیوک سنگھ کے زیر اثر بھارتی حکومت ہندو بالا دستی کی پالیسی پر عمل پیرا ہے اورملک میں دیگر اقلیتوں کو بھارتی شہری تسلیم نہیں کرتی۔
انہوں نے کہا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی ہٹلر کے نازی نظریے پر عمل پیرا ہے اور ملک میں مسلمان، سکھ، دِلت سمیت تمام اقلیتوں کو بدترین مظالم کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔
وزیراعظم نے کہا کہ بھارت کے غیر قانونی زیر قبضہ جموں وکشمیرمیں کشمیریوں سے بھی یہی سلوک کیا جا رہا ہے۔ کشمیری دہائیوں سے جدوجہد کر رہے ہیں اور انہوں نے اپنے بچپن سے فیصلہ کیا تھا کہ جب بھی انہیں موقع ملا وہ کشمیریوں کا مقدمہ لڑیں گے۔
عمران خان نے کہا کہ ان کی کوششوں کی بدولت کشمیر کا معاملہ پچاس سال کے وقفہ کے بعد اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں زیر بحث آیا۔ کشمیریوں نے تمام مظالم کا بہادری اور جرات سے سامنا کیا اور تمام پاکستانیوں کے سر فخر سے بلند رکھے۔
وزیراعظم نے کہا کہ بھارت نے غیر قانونی زیر قبضہ جموں وکشمیر میں آزادی کا تناسب تبدیل کرنے کی کوشش کی مگر وہ کامیاب نہیں ہو سکا۔ عمران خان نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ پاکستان کشمیر کا مسئلہ تمام عالمی فورمز پر اٹھاتا رہے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں