لاہور : ڈیفنس میں ایک گھر سے سابق ماڈل کی نیم برہنہ لاش برآمد

لاہور: (ویب ڈیسک) لاہور کے علاقے ڈیفنس (بی) سے ایک سابق ماڈل کی لاش برآمد ہوئی ہے۔ پولیس حکام کا کہنا ہے کہ مقتولہ کی عمر لگ بھگ 30 سال تھی۔ اسے گلا دبا کر قتل کیا گیا، کیس پر تفتیش شروع کر دی ہے۔


پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ یہ واقعہ گزشتہ رات پیش آیا۔ پولیس اطلاع ملنے پر ڈیفنس کے علاقے میں پہنچی تو وہاں ایک گھر میں ایک خاتون کی نیم برہنہ لاش موجود تھی، تفتیش کرنے پر پتا چلا کہ مقتولہ سابق ماڈل اور اس کا نام نایاب ہے۔
پولیس نے مقتولہ نایاب کے بھائی کی مدعیت میں نامعلوم افراد کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کرکے قتل کی تحقیقات شروع کر دی ہیں۔
نایاب کے سوتیلے بھائی نے مقدمے میں بتایا کہ وہ روزانہ ضرورت کا سامان پہنچانے نایاب کے ڈیفنس فیز فائیو میں واقع گھر جایا کرتا تھا۔ مقتولہ 2015ء اس گھر میں اکیلی رہتی تھی۔
ایف آئی آر میں مدعی نے بتایا کہ ہفتے کی رات 8 بجے وہ اپنی سوتیلی بہن کے گھر پہنچا تو تو چھوٹا دروازہ کھلا تھا، ان کی گاڑی گیراج میں کھڑی تھی
محمد علی ناصر نے ایف آئی آر میں درج بیان میں کہا کہ میں نے دیکھا کہ باتھ روم کی کھڑکی کی جالی ٹوٹی ہوئی تھی، وہ اس کھڑکی کے راستے گھر کے اندر داخل ہوا تو ٹی وی لاؤنج میں اس کی سوتیلی بہن نایاب کی نیم برہنہ لاش پڑی تھی۔
اس نے بتایا کہ مقتولہ کے گلے پر زخموں کے نشان تھے۔ یہ منظر دیکھنے کے بعد اس نے لاش کو کپڑے سے ڈھانپا اور 15 پر کال کر کے پولیس کو اطلاع دی۔
دوسری جانب پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ مقتولہ نایاب کی لاش کو پوسٹ مارٹم کیلئے ہسپتال بھیج دیا گیا ہے۔ ابتداءی تفتیش میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ خاتون کو تشدد کرکے قتل کیا گیا، مزید چیزیں پوسٹ مارٹم رپورٹ میں سامنے آئیں گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں