644.39 پوائنٹس کی تیزی، سرمایہ کاروں کو ایک کھرب روپے سے زائد کا فائدہ

لاہور: (ویب ڈیسک) پاکستان سٹاک مارکیٹ میں ایک روزہ مندی کے بعد زبردست تیزی ریکارڈ کی گئی، 100 انڈیکس 644.39 پوائنٹس بڑھ گیا، ایک مرتبہ پھر 40 ہزار کی نفسیاتی حد بحال ہو گئی جبکہ سرمایہ کاروں کو ایک کھرب روپے سے زائد کا فائدہ ہوا۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز پاکستان پاکستان سٹاک مارکیٹ میں 114.93 پوائنٹس کی مندی ریکارڈ کی گئی تھی، انڈیکس 40 ہزار کی نفسیاتی حد سے محروم ہونے کے بعد 39 ہزار 914.76 پوائنٹس کی سطح پر پہنچ کر بند ہوا تھا جبکہ سرمایہ کاروں کو 25 ارب روپے کا نقصان برداشت کرنا پڑا تھا۔

تاہم رواں ہفتے کے دوسرے کاروباری روز کے دوران پاکستان سٹاک مارکیٹ میں تیزی کی واپسی ہوئی ہے، پہلے ہی دو گھنٹوں کے دوران انڈیکس 238.79 پوائنٹس بڑھ گیا جس کے بعد صبح دس بجے ہی 40 ہزار کی نفسیاتی حد بحال ہو گئی تھی۔

دن بھر تیزی کا تسلسل دیکھنے کو ملا، ایک مرتبہ انڈیکس میں 800 پوائنٹس کی تیزی ریکارڈ کی گئی تھی اور انڈیکس 40706.08 پوائنٹس کی سطح پر پہنچ گیا تھا تاہم ملک پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز شریف کی نیب پیشی سے قبل ہونیوالی ہنگامہ آرائی کے اثرات سٹاک مارکیٹ پر پڑے۔

مظاہرے کی وجہ سے تیزی کی طرف جانے والی حصص مارکیٹ میں کاروبار کے اختتام پر تھوڑی مندی ہوئی اور انڈیکس 644.39 پوائنٹس کی تیزی کے بعد 40559.15 پوائنٹس کی سطح پر بند ہوا۔

پورے کاروباری روز کے دوران سٹاک مارکیٹ میں 6 حدیں بحال ہوئیں، بحال ہونے والی حدوں میں 40000، 40100، 40200، 40300، 40400، 40500 کی حدیں شامل ہیں۔ جبکہ پورے کاروباری روز کے دوران کاروبار میں 1.61 فیصد کی بہتری ریکارڈ کی گئی اور 40 کروڑ 15 لاکھ 97 ہزار 409 شیئرز کا لین دین ہوا، جس کے باعث سرمایہ کاروں کو ایک کھرب روپے سے زائد کا فائدہ ہوا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں