ملک میں کورونا وائرس پھیلنے لگا، مریضوں کی تعداد 1000 ہوگئی

ملک میں کورونا وائرس پھیلنے لگا، مریضوں کی تعداد 1000 ہوگئی، سندھ 413، پنجاب 296، بلوچستان 115، خیبر پختونخوا 78، اسلام آباد 16، آزاد کشمیر 1، گلگت بلتستان میں متاثرین 81 ہوگئے۔

پاکستان میں اب تک کرونا وائرس کے باعث 7 افراد جاں بحق، 19 افراد صحت یاب جبکہ 5 کی حالت تشویشناک ہے۔ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کرونا وائرس کے 28 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔

پنجاب

پنجاب میں کورونا وائرس میں مبتلا افراد میں 176 زائرین شامل ہیں جب کہ لاہور میں 65، گجرات میں 20، جہلم 16، گوجرانوالہ 8، ملتان 3، راولپنڈی 2، فیصل آباد 2، سرگودھا، نارووال، منڈی بہاؤ الدین اور رحیم یار خان میں ایک، ایک کیس ہے۔

کورونا وائرس کے باعث ملک میں ساتویں اور پنجاب میں پہلی ہلاکت ہوگئی۔ گزشتہ روز لاہور کے میو ہسپتال میں کورونا وائرس کا ایک مریض جاں بحق ہوگیا۔ مریض افرا سیاب کی عمر 57 سال اور شیخوپورہ کا رہائشی تھا۔ ہسپتال انتظامیہ کے مطابق اسے دمہ و سانس میں دشواری کا بھی سامنا تھا۔

ترجمان محکمہ صحت کے مطابق مریض نے غیر ملکی سفر نہیں کیا، چند روز قبل آزاد کشمیر گیا تھا۔ مرحوم کی آخری رسومات کورونا وائرس کی تدفین کی گائیڈ لائن کے مطابق ادا کی جائیں گی۔ افرا سیاب کی ہلاکت کے بعد پورے علاقے کو سیل کر کے گلی کے ہر فرد کا ٹیسٹ کیا جا رہا ہے۔

پنجاب حکومت نے سکولوں کی چھٹیوں میں 31 مئی تک توسیع اور بلدیاتی الیکشن 9 ماہ کیلئے ملتوی کرنے کا فیصلہ کر لیا جبکہ زکوۃ کی تقسیم ایک ماہ قبل شروع کر دی جائے گی۔ عثمان بزدار نے کورونا وائرس کا علاج کرتے ہوئے اپنی جان کا نذرانہ پیش کرنیوالے گلگت بلتستان کے شہید ڈاکٹر اسامہ ریاض کو خراج عقیدت پیش کیا گیا۔

پنجاب حکومت نے محکمہ صحت کو 11 ارب روپے کے فنڈز جاری کر دیئے ہیں جس کی منظوری کابینہ کے اجلاس میں دی گئی۔ 2 ارب روپے کے فنڈز پی ڈی ایم اے کو جاری کئے گئے ہیں جبکہ 60 کروڑ روپے اضلاع کو فراہم کر دیئے گئے ہیں۔ پنجاب کابینہ نے بلوچستان حکومت کو ایک ارب روپے کے فنڈز جاری کرنے کے فیصلے کی توثیق کی۔

وزیراعلیٰ نے کہا پنجاب میں دفعہ 144نافذ ہے اور کورونا وائرس سے بچاؤ کیلئے کئے جانیوالے اقدامات کی پابندی ہر صورت کرائی جائے گی تاہم کھانے پینے کی اشیا کی ہوم ڈیلیوری، ادویات، سینی ٹائزر وغیرہ کی تیاری میں استعمال ہونیوالے خام مال کا کاروبار متاثر نہیں ہوگا اور کسی بھی ایشو کی صورت میں مقامی لوگ متعلقہ انتظامیہ سے رابطہ کر سکتے ہیں۔
سندھ

سندھ میں کورونا وائرس کے مزید نئے کیسز آگئے جس کے بعد صوبے میں متاثرین کی تعداد 413 ہوگئی۔ محکمہ صحت سندھ کی ترجمان میران یوسف نے بتایا کہ نئے آنے والے کیسز میں 11 کراچی سے ہیں جو مقامی سطح پر منتقل ہوئے جبکہ دیگر 5 کیسز ایران سے سکھر آنے والے زائرین کے ہیں۔

مریضوں کی مزید تفصیل بتاتے ہوئے انہوں نے کہا کہ سندھ میں سکھر کے سوا دیگر صوبے میں 145 کیسز ہیں جس میں سے 144 کیسز کراچی اور ایک دادو سے ہے جس میں سے 4 صحت یاب ہوچکے ہیں اور 137 زیر علاج ہیں۔ ان 141 کیسز میں 90 کیسز ایسے ہیں جو مقامی سطح پر منتقل ہوئے۔

انہوں نے بتایا کہ دیگر کیسز تفتان سے سکھر آنے والے زائرین ہیں جس میں 265 افراد کے ٹیسٹ مثبت آئے ہیں جبکہ 3 ہزار 149 افراد کے نتائج منفی آئے ہیں جبکہ کراچی میں کورونا وائرس سے متاثرہ مزید 10 مریض صحتیاب ہوگئے جس کے بعد صوبے میں صحتیاب ہونے افراد کی تعداد 14 ہوگئی ہے۔
خیبر پختونخوا

محکمہ صحت خیبر پختونخوا کے مطابق صوبے میں کورونا وائرس کے مزید کیسز سامنے آئے ہیں۔ ان میں سے تفتان سے ڈیرہ اسماعیل خان آنیوالے 37 زائرین، 2 پشاور اور ایک مریض جنوبی وزیرستان میں سامنے آیا جس کے بعد خیبر پختونخوا میں مجموعی تعداد 78 ہوگئی ہے۔
اسلام آباد، بلوچستان، گلگت بلتستان، آزاد کشمیر

بلوچستان میں 5 جبکہ اسلام آباد اور گلگت بلتستان میں ایک، ایک نیا کیس رپورٹ ہوا ہے جس کے بعد بلوچستان میں 115، اسلام آباد میں 16 اور گلگت بلتستان میں 81 افراد کرونا وائرس سے متاثر ہیں۔ آزاد کشمیر میں کوئی نیا کیس رپورٹ نہیں ہوا، پہلے ہی آزاد کشمیر میں ایک شخص متاثر ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں