Home / Latest News / بچی سے زیادتی و قتل کیس
بچی سے زیادتی و قتل کیس

بچی سے زیادتی و قتل کیس

سپریم کورٹ نے جڑانوالہ میں 7 سالہ بچی سے زیادتی و قتل کیس میں قبرکشائی کا حکم دے دیا، ایم ایس الائیڈ ہسپتال کو دوبارہ پوسٹمارٹم کرنے کی ہدایت کر دی۔
چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے جڑانولہ میں 7 سالہ بچی کو بے حرمتی کے بعد قتل کرنے پر از خود نوٹس کیس کی سماعت کی۔ سماعت کے دوران آئی جی پنجاب نے عدالت کو بتایا کہ تمام زاویوں سے تفتیش کر رہے ہیں جس سے درخواستگزار مطمئن ہیں جس پر چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہا اطمینان عدالت اور ریاست کا ہونا چاہیے درخواستگزار کا نہیں۔
دوران سماعت مدعیہ کے وکیل نے پوسٹ مارٹم رپورٹ پر اعتراضات اٹھا دئیے جس پر چیف جسٹس پاکستان نے مقتولہ کی فرانزک رپورٹ بھی طلب کر لی جبکہ پراسیکیوٹر جنرل کو بھی آئندہ سماعت تفتیش کی رپورٹ پیش کرنے کا حکم دے دیا۔ چیف جسٹس پاکستان نے ایم ایس الائیڈ ہسپتال فیصل آباد جوڈیشل مجسٹریٹ سے اجازت لیکر بچی کی قبرکشائی کروا کہ دوبارہ پوسٹ مارٹم کروانے کا حکم دے دیا۔

About editor editor

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Scroll To Top