‘وادی میں خون ریزی کا خدشہ، اقوام متحدہ مسئلہ کشمیر پر فوری ایکشن لے’

نیویارک: (رائل نیوز) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ مقبوضہ وادی میں خون ریزی کا خدشہ ہے، اقوام متحدہ اور دنیا مسئلہ کشمیر پر فوری ایکشن لے، پاکستان اور بھارت میں کشیدگی بڑھ سکتی ہے، جنگ کی دھمکی نہیں، دنیا کو سنگین صورتحال سے آگا کر رہا ہوں۔

وزیراعظم عمران خان نے نیویارک میں ایشیا سوسائٹی سے خطاب کرتے ہوئے کہا ریاست کا سربراہ قانون سے بالاتر نہیں، میرا ملک کیلئے وہی وژن ہے جو پاکستان بنانے والوں کا تھا، قانون کی بالادستی ہی کسی معاشرے کی بنیاد ہوتی ہے، پاکستان اسلام کے نام پر وجود میں آیا تھا، اللہ تعالیٰ نے پاکستان کو بے پناہ وسائل سے نوازا ہے، میں نے اپنی موومنٹ کا نام ہی انصاف رکھا تھا، میری موومنٹ کا مقصد ہی قانون کی بالا دستی ہے۔

عمران خان کا کہنا تھا ہم نے 70 فیصد خسارہ کم کر دیا ہے، ہمارے معاشرے میں بہت کم لوگ ٹیکس دیتے ہیں، پاکستان میں 5 سال کے دوران ایک ارب درخت لگائیں گے، ایران کے مسئلے پر ہم ثالث کا کردار ادا کر سکتے ہیں، ہم نے پاکستان میں انتہا پسندی کا خاتمہ کیا، ملک میں کسی مسلح تنظیم کو کام کرنے کی اجازت نہیں، ہم مشکل حالات میں بھی ترقی کی راہ پر گامزن ہیں۔

وزیراعظم نے مزید کہا کہ بھارت نے 80 لاکھ کشمیریوں کو محصور کر رکھا ہے، بھارت نے ہمیں ایف اے ٹی ایف کی بلیک لسٹ میں دھکیلنے کی کوشش کی، اقوام متحدہ کے لیے ضروری ہے کشمیر کے مسئلے پر ابھی ایکشن لے، ہم سنجیدہ تعلقات چاہتے ہیں مگر بھارت مخلص نہیں، ہمیں علاقائی سطح پر بہت سے چیلنجز کا سامنا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں