آر ایس ایس کے غنڈوں کو مقبوضہ وادی میں بھیجا جا رہا ہے: وزیراعظم

زیراعظم عمران خان نے کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیلئے ٹویٹر اکاؤنٹ پر ڈی پی بلیک کر دی۔ انہوں نے کہا کہ آر ایس ایس کے غنڈوں کو مقبوضہ وادی میں بھیجا جا رہا ہے۔
وزیراعظم نے وادی میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر دنیا کے سامنے سوالات اٹھا دیئے۔ عمران خان کا کہنا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں 12 روز سے کرفیو نافذ اور مواصلات کا نظام بلیک آؤٹ ہے، پہلے سے موجود بھارتی فوج کی موجودگی میں دستوں کا اضافہ کر دیا گیا، کیا دنیا خاموشی سے مقبوضہ کشمیر میں مسلمانوں کی نسل کشی اور سربرینیکا جیسے ایک اور قتل عام کا نظارہ کرے گی۔

Imran Khan

@ImranKhanPTI

In IOK, 12 days of curfew, presence of extra troops in an already heavily militarized occupied territory, sending in of RSS goons, complete communication blackout; with the example of Modi’s earlier ethnic cleansing of Muslims in Gujarat

23.6K people are talking about this

Imran Khan

@ImranKhanPTI

In IOK, 12 days of curfew, presence of extra troops in an already heavily militarized occupied territory, sending in of RSS goons, complete communication blackout; with the example of Modi’s earlier ethnic cleansing of Muslims in Gujarat

Imran Khan

@ImranKhanPTI

Will world silently witness another Srebrenica-type massacre & ethnic cleansing of Muslims in IOK? I want to warn international community if it allows this to happen, it will have severe repercussions & reactions in the Muslim world setting off radicalisation & cycles of violence

17.4K people are talking about this

عمران خاں کا کہنا تھا کہ اقوام عالم کو متنبہ کرتا ہوں کہ اگر یہ ہونے دیا تو مسلم دنیا میں اس کا شدید ردعمل ہوگا، کشمیریوں پر مظالم نہ روکے گئے تو انتہا پسندی کو ہوا ملے گی اور تشدد کا نیا دور ابھرے گا۔ وزیراعظم نے مزید کہا کہ مودی پہلے گجرات میں مسلمانوں کی نسل کشی کرچکا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں