مکی آرتھر کا کنٹریکٹ ختم ہونے پر شدید مایوسی کا اظہار

لاہور: (ویب ڈیسک) پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کوچ مکی آرتھر نے پی سی بی کی جانب سے فارغ کئے جانے پر شدید مایوسی کا اظہار کیا ہے، ان کا کہنا تھا کہ ورلڈ کپ میں پاکستانی ٹیم کی کارکردگی بہتر بنانے کیلئے بھرپور کوشش کی۔

مکی آرتھر کا پاکستان کرکٹ بورڈ کے ساتھ کنٹریکٹ ورلڈ کپ 2019 کے بعد گزشتہ ماہ ختم ہوا تھا جس کی مزید 2 سالہ توسیع کیلئے سابق کوچ نے درخواست کی تھی تاہم چئیرمین کرکٹ بورڈ احسان مانی نے مکی آرتھر اور ان کے کوچنگ سٹاف جس میں گرانٹ فلاور اور اظہر محمود شامل تھے سب کو “بائے بائے” کہہ دیا۔

پی سی بی کے جاری کردہ بیان کے مطابق “بورڈ کی جانب سے ہیڈ کوچ مکی آرتھر، باولنگ کوچ اظہر محمود، بیٹنگ کوچ گرانٹ فلاور اور ٹرینر گرانٹ لڈن کے کنٹریکٹ میں توسیع نہ کرنے کے فیصلے کے بعد ان عہدوں پر نئی تقرریوں کا عمل جلد شروع کیا جائے گا۔”

پی سی بی کی 4 رکنی کمیٹی حالیہ ورلڈ کپ میں قومی ٹیم کی کارکردگی کا جائزہ لے گی جس کے بعد کوچنگ سٹاف کی تقرری عمل میں آئے گی۔ سابق پاکستانی کوچ مکی آرتھر کو جب اپنے کنٹریکٹ کی تجدید نہ ہونے کی اطلاع ملی تو انھوں نے شدید مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ورلڈ کپ میں پاکستانی ٹیم کی کارکردگی بہتر بنانے کیلئے بھرپور کوشش کی تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں